Home / Business / پاکستان میں 9ماہ میں بجٹ خسارہ1238ارب روپے سے تجاوزکرگیا

پاکستان میں 9ماہ میں بجٹ خسارہ1238ارب روپے سے تجاوزکرگیا

!پاکستان میں 9ماہ میں بجٹ خسارہ1238ارب روپے سے تجاوزکرگیا
اسلام آباد : حکومت کے اخراجات بے قابو کہاں کی کفایت شعاری، کیسی بچت؟؟ کہ نو ماہ میں بجٹ خسارہ بارہ سو اڑتیس ارب روپے سے تجاوز کر گیا، ماہرین نے مہنگائی میں اضافے کی پیشگوئی کر دی۔
پاکستان کے لوگوں کی کہانی اس سے مختلف نہیں کہ آمدن اٹھنی خرچہ روپیہ، جی ہاں ملک میں کفایت شعاری کے حکومتی دعوے بڑے بڑے مگر حقیقت کچھ اور ہی نکلی، ملکی معیشت کو پھر بجٹ خسارے نے جکڑ لیا، جولائی تا مارچ 3145 ارب روپے آمدن کے مقابلے میں اخراجات 4383 ارب روپے سے تجاوز کرگئ

بجٹ خسارہ پورا کرنے کیلئے 1238 ارب روپے قرض لیا گیا، مالی سال کے پہلے نو ماہ میں 1094 ارب روپے قرضوں پر سود کی نذر ہوگئے، اقتصادی ماہرین کے مطابق 1276 ارب روپے کے ہدف کے مقابلے میں سالانہ بجٹ خسارہ کہیں زیادہ ہونے کا خدشہ ہے
ماہرین نے حکومت کو مشورہ دیا ہے کہ خسارے سے نکلنے کیلئے ٹیکس آمدن بڑھانا ہوگی۔ آمدن کم ہونے کے باعث صوبوں کو نو ماہ مں 1412 ارب روپے ہی مل سکے ۔ اس دوران صوبوں نے 137 ارب روپے کم خراجات کیے ۔ دفاع پر 536 ارب جبکہ وفاقی ترقیاتی منصوبوں پر 323 ارب روپے خرچ ہوئے

Check Also

پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروبار کے آغاز پر منفی رجحان

پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروبار کے آغاز پر منفی رجحان

پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروبار کے آغاز پر منفی رجحان دیکھا گیا۔ کاروبار کے دوران …

Translate »