Home / Pakistan / وزیر اعظم کی جے آئی ٹی پر کڑی تنقید

وزیر اعظم کی جے آئی ٹی پر کڑی تنقید

لندن : وزیر اعظم میاں نواز شریف نے کہا ہے کہ ہمارے بدترین سیاسی مخالفین کو جے آئی ٹی میں سناجارہاہے، سازشیں کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

وزیراعظم نوازشریف پارک لین لندن میں اپنی رہائشگاہ پرمیڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ میری سمجھ سے باہر ہے کیا چل رہا ہے؟جے آئی ٹی کے ممبران سے بھی کہا تھا یہ کیا معاملہ ہے، کیا کوئی کرپشن کا کیس ہے؟ کوئی الزام ہی سامنے لاؤ،صرف ہمارے ذاتی کاروبار کو کھنگال رہے ہیں۔،

انہوں نے کہا کہ 1972 سے شروع کیاجارہا ہے،اس وقت میں وزیراعظم تھا نہ وزیراعلیٰ تھا، بھٹو نے ہماری فیکٹری کو نیشنلائز کرلیا تھا، میں سمجھتا ہوں اس سے بڑا اور کیا تماشا لگ سکتا ہے، مجھے اپنی یا اپنے خاندان کی فکر نہیں ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ صرف پاکستان کی فکر ہے کہ بڑی مشکل سے معیشت کو پٹری پر ڈالا ہے، پہلے دھرنے سے چینی صدر پاکستان نہیں آسکے،پہلے دھرنے میں کہا گیا الیکشن میں دھاندلی ہوئی ہے،یہ الیکشن میں بری طرح ہار گئے تھے،عوام ان کے ساتھ نہیں۔

نواز شریف کا کہنا تھا کہ نوے فیصد ضمنی انتخابات میں بھی ن لیگ کی فتح ہوئی، پاکستان کا وقت ضائع کیاجارہا ہے،توجہ منتقل کی جارہی ہے، چار سال میں ہماری حکومت پر کوئی انگلی بھی نہیں اٹھا سکتا، پچھلے دونوں ادوار میں بھی ہم پر کرپشن کا کوئی الزام نہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ اپوزیشن سمجھتی ہے کہ ان کی سیاست ختم ہوچکی ہے،عوامی حمایت نہیں لاسکتے تو سازشیں کی جارہی ہیں،غیر تجربہ کار سیاست دان سازشیں کررہے ہیں،لوڈ شیڈنگ ہمیشہ کے لیے ختم ہونے جارہی ہے۔

جے آئی ٹی واٹس ایپ سے شروع ہوتی ہے،ہمارے بدترین سیاسی مخالفین کو جے آئی ٹی میں سناجارہاہے، جے آئی ٹی کی تفتیش کے بعد معیشت واپس گررہی ہے، سازشیں کامیاب نہیں ہونے دیں گے،ڈٹ کر مقابلہ کریں گے۔

Check Also

یوم عاشور پر شہر قائد میں موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد

یوم عاشور پر شہر قائد میں موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد

یوم عاشور کے سلسلے میں شہر قائد میں موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد …

Translate »