Home / Pakistan / نئے وزیراعظم خاقان عباسی نے پہلے قومی اسمبلی اجلاس میں عائشہ گلالئی کا مسئلہ اٹھادیا

نئے وزیراعظم خاقان عباسی نے پہلے قومی اسمبلی اجلاس میں عائشہ گلالئی کا مسئلہ اٹھادیا

اسلام آباد:نئے وزیراعظم خاقان عباسی نے پہلے قومی اسمبلی اجلاس میں عائشہ گلالئی کا مسئلہ اٹھادیا۔ چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان پر عائد کیے جانے والے سنگین الزامات کی تحقیقات کیلئے پارلیمانی کمیٹی کے قیام کی تحریک منظورکرلی گئی۔ شیریں مزاری ایوان میں پھٹ پڑیں۔

نئے وزیراعظم اورنئی کابینہ کے ساتھ آج ہونے والے قومی اسمبلی کے اجلاس میں عمران خان پر الزامات عائد کرنے اور پی ٹی آئی کو خیرباد کہنے والی عائشہ گلالئی اہم موضوع بن کر سامنے آئیں۔وزیراعظم خاقان عباسی نے اسپیکرقومی اسمبلی سردار ایازصادق سے معاملے پرپارلیمانی تحقیقاتی کمیٹی بنانے کی درخواست کی۔
مسلم لیگ ن کی خاتون رکن اسمبلی عارفہ خالد نے پارلیمانی کمیٹی کے قیام کیلئے تحریک قومی اسمبلی میں پیش کی جسے منظور کرلیا گیا۔ تحریک کے متن کے مطابق پارلیمانی کمیٹی کے قیام کا حکم دیں جو تحقیقات کرکے ایک ماہ میں اپنی رپورٹ پیش کرے۔ کمیٹی میں تمام جماعتوں کی نمائندگی ہونی چاہیے جس میں حکومتی و اپوزیشن ارکان بھی شامل ہوں، دونوں فریقین کو اپنا موقف پیش کرنے کا موقع دیا جائے۔
پی ٹی آئی رکن اسمبلی شیریں مزاری اس صورتحال پرحکومتی ارکان سے الجھ پڑیں اور کہا کہ خواجہ آصف نے انہیں گالیاں دیں مگر تب توکسی کو خیال نہ آیا تحقیقاتی کمیٹی بنانے کا۔شیریں مزاری کی تقریر کے دوران لیگی خواتین نے بھی شورشرابہ شروع کردیا۔پیپلزپارٹی رکن نفیسہ شاہ نے تحریک انصاف کا ردعمل اوورری ایکشن قرار دےدیا۔
اسپیکرسردارایازصادق نے قومی اسمبلی کا اجلاس پیر کی شام 4 بجے تک ملتوی کردیا۔

Check Also

یوم عاشور پر شہر قائد میں موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد

یوم عاشور پر شہر قائد میں موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد

یوم عاشور کے سلسلے میں شہر قائد میں موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد …

Translate »